شاعری

pictureملت کا پاسبان ہے محمد علی جناح

منظوم نظموں کا مجموعہ

مرتب : خورشید ربانی
ناشر : اکادمی ادبیات پاکستان
قیمت: 250 روپے
تشکیل ای بک: نوید فخر

پرسی وکیل

جان بچنے کی مبارک باد ہے

اے مرے اہلِ وطن کے راہبر
قائداعظم جناحِؒ نامور
یہ سنا ہے آپ پر حملہ ہوا
بخت کا لکھا جو تھا پورا ہوا
شُکر ہے حق نے بچایا آپ کو
دست خونی سے چھڑایا آپ کو
روک لی جرات سے ضربِ اہل کمیں
آفریں اے شیرِ مسلم آفریں
دے کے جنبش ہمت بے باک کو
خوب پکڑا مجرم سفاک کو
واہ کیا کہنا بزرگ اہل شان
کر دکھایا آپ نے کار جوان
میں فدائے ملک ہوں عالی جناب
شوق آزادی ہے دل میں بے حساب
آپ بھی ہیں پیشوائے بے کساں
رہبر آزادی¿ ہندوستاں
اس لیے الفت ہے مجھ کو آپ سے
ربط انسیت ہے مجھ کو آپ سے
کامیابی آپ کی دل شاد ہے
جان بچنے کی مبارک باد ہے
اے امیرِ ملک میرِ حریت
کیجئے مقبول نذرِ تہنیت
یہ دُعا کرتا ہے آخر کو وکیل
آپ کو قائم رکھے ربِّ جلیل

 

٭20جولائی 1943ءکو قائداعظمؒ پر قاتلانہ حملہ ہوا لیکن بانی¿ پاکستان نے بڑی بہادری سے قاتل کو قابو کر لیا۔ یہ نظم اسی پسِ منظرمیں ہے۔

صفحات : 1 | 2 | 3 | 4 | 5 | 6 | 7 | 8 | 9 | 10 | 11 | 12 | 13 | 14 | 15 | 16 | 17 | 18 | 19 | 20 | 21 |
| 22 | 23 | 24 | 25 | انڈیکس |

تازہ ترین

کیا آپ صاحب کتاب ہیں؟

کیا آپ چاہتے ہیں کہ آپ کی تصنیف دنیا بھر میں لاکھوں شائقین تک پہنچے ؟ تو کتاب ”ان پیچ“ فارمیٹ میں اور سرورق سکین کر کے ہمیں ای میل یا ارسال کریں، ہم آپ کے خواب کو شرمندہ تعبیر کریں گے۔

مزید معلومات کے لئے یہاں کلک کریں