شاعری

pictureملت کا پاسبان ہے محمد علی جناح

منظوم نظموں کا مجموعہ

مرتب : خورشید ربانی
ناشر : اکادمی ادبیات پاکستان
قیمت: 250 روپے
تشکیل ای بک: نوید فخر

اظہر عباس

نذر قائد

کبھی اک وقت تھاکہ ہم جو ہم ہیں
ہم نہیں تھے
غلاموں جیسی اپنی زندگی تھی
مگر وہ زندگی بھی زندگی تھی؟
ےہ ہم جو آج اپنے اپنے پیروں پر کھڑے ہیں
ےہ ہم جو سر اٹھاکرچل رہے ہیں
کہ جیساچاہتے ہیں کر رہے ہیں
مگر ہم نے کبھی دیکھا ہے مڑ کر
کبھی سوچاہے پل بھر
ہماری بھیڑکو اک کرنے والا
ہمیں منزل تلک پہنچانے والا
ہمیں اس روشنی میں لانے والا
جھلستی دھوپ میں وہ سائباں سا
ہماراقائداعظمؒ کہاں ہے

صفحات : 1 | 2 | 3 | 4 | 5 | 6 | 7 | 8 | 9 | 10 | 11 | 12 | 13 | 14 | 15 | 16 | 17 | 18 | 19 | 20 | 21 |
| 22 | 23 | 24 | 25 | انڈیکس |

تازہ ترین

کیا آپ صاحب کتاب ہیں؟

کیا آپ چاہتے ہیں کہ آپ کی تصنیف دنیا بھر میں لاکھوں شائقین تک پہنچے ؟ تو کتاب ”ان پیچ“ فارمیٹ میں اور سرورق سکین کر کے ہمیں ای میل یا ارسال کریں، ہم آپ کے خواب کو شرمندہ تعبیر کریں گے۔

مزید معلومات کے لئے یہاں کلک کریں